بلاگ

لاک ڈاؤن اور اسلامی نقطہ نظر

Stay Home

تالا بندی اسلامی تعلیمات کے مطابق ہے، حدیث مبارکہ ہے کہ اگر آندھی، طوفان، زوروں کی بارش، اور شدید بیمار ہو تو چاہئیے کہ گھر میں رہ کر ہی نماز جیسی اہم عبادت کو انجام دے، جو تالا بندی کے تصور کو پیش کرتا ہے۔ صبر و قناعت اللہ کے نزدیک بہت ہی محبوب و مقبول ہے جو اس تالا بندی کا خاصہ رہا۔

قربانی ایک واجب عمل

Eid-ul-Adha

عیدالاضحی کے دن امت محمدیہ کاحسب حیثیت جانوروں کی قربانی کا نذرانہ اللہ کے حضور پیش کرنا اس جذبۂ محبت وفدائیت کا اظہار ہے جس کے پس منظر میں حضرت ابراہیم و اسماعیل علیھما السلام کی ایک حیرت انگیز تاریخ موجود ہے۔

قربانی کی اہمیت و فضیلت

Qurbani

قربانی، اللہ تعالٰی سے غیر مشروط محبت اور ایمان کی علامت ہے۔ عام طور پر مسلمان سنت ابراہیمی کی تکمیل کے لئے عید الاضحی کی نماز کے بعد جانور کی قربانی دیتے ہیں۔ جسے قربانی یا ذبیھہ کہا جاتا ہے۔ یہ ایک بہت اہم مذہبی عمل ہے۔ جس کی اہمیت و فضیلت قرآن و حدیث میں متعد مقام پر بیان کیا گیا ہے۔

ذی الحجہ کے پہلے 10 دن کی اہمیت

Hajj

قرآن مجید فرقان حمید میں اللہ تبارک و تعالیٰ نے دس راتوں کی قسم کھائی ہے ”قسم ہے فجر کی،اور دس راتوں کی“۔ مفسرین کی اکثریت کے مطابق ان دس راتوں سے مرادذی الحجہ کی پہلی دس راتیں ہیں، بلاشبہ جو ذات خود عظیم ہو وہ صاحب عظمت شے ہی کی قسم کھاتی ہے۔ اللہ عزوجل کا کسی شے کی قسم کھانا اس کی عظمت و فضیلت کی واضح دلیل ہے۔

تالا بندی کے اثرات

Covid-19 Impact

تالا بندی سے طرح طرح کے مسائل پیدا ہوئے جس سے انسانی زندگی مفلوج ہو کر رہ گئی، سماجی، ملکی و قومی تانے بانے پوری طرح بکھر کر رہ گئے، کچھ ایک کو چھوڑ کر زندگی کے ہر شعبے میں اس کے منفی اثرات مرتب ہوئے- ماحولیاتی آلودگیوں سے فضا پاک و صاف رہی، جس نے ایک مثبت پیغام دیا ہم انسانوں کو کہ کسی بھی قسم کی آلودگی پر قابو پایا جاسکتا ہے، مگر وہیں دوسری جانب تالا بندی کے اثرات کی بات کی جائے تو اس نے سیاسی، سماجی، معاشی، مذہبی، اخلاقی، طبی، تنظیمی، رفاہی، تعلیمی و تدریسی طور پر بہت ہی برے و گہرے اثرات مرتب کئے ہیں۔

لاک ڈاؤن اور اس کی تاریخ

Lockdown

تالا بندی کا استعمال تب ہوتا ہے جب کسی چیز پر کنٹرول یا قابو کرنا ہو، وہ آفت، مصیبت، سیلاب، طوفان، آگ، دہشت گردی، قتل و غارت گری، قدرتی آفات، وبا، پریشانی، بیماری، جراثیم وغیرہ ہو مگر خطرے سے خالی نہ ہو، اگر تالا بندی نہیں کیا گیا تو وه انسان کو اپنی لپیٹ میں اسطرح لے لیا کہ جینا دوبھر ہو جائے اور وہ صرف اسی تک محدود نہ رہے بلکہ دوسروں کو بھی دامن گیر کر لے۔

کورونا لاک ڈاؤن! طلبا کےلئے مشکلات ومواقع

Lockdonwn and Education

کورونا وائرس سے صرف حکومتیں اور ادارے ہی اس مہلک مرض سےپریشان نہیں بلکہ اس ایک بہت بڑاطبقہ جو اس تمام صورت حال سے متاثر ہیں وہ اہل علم سے پوشیدہ نہیں ان طبقہ میں سے ایک خاص طبقہ طلبہ کا ہے ۔ جو اس لاک ڈاؤن سے بہت ہی بری طرح متاثر ہے ان میں سے خاص کر وہ طلبہ جو اس سال بورڈ کے امتحان دینے والے تھے۔ان طلباء کا ایک منصوبہ (planning )متعین ہوتا ہے اسی منصوبے کے تحت کامیابی حاصل کر نےکےلئے جدوجہد کے ساتھ پڑھائی کرتے ہیں۔